peperonity.net
Welcome, guest. You are not logged in.
Log in or join for free!
 
Stay logged in
Forgot login details?

Login
Stay logged in

For free!
Get started!

Guestbook


khota sikka - Newest pictures
a--------urdu.duniya.in.peperonity.net

❅ کھوٹا سکّہ ❅

♧ دلچسپ مضامین ♧


وہ پڑھائی میں نکمّا تھا اس لیے اپنے ابا ماسٹر رحمت علی سے، جو تھے بھی ریاضی کے استاد، اکثر پٹتا رہتا تھا۔ ادھر ماسٹر صاحب سامنے کے دروازے سے گھر میں داخل ہوتے، ادھر وہ پچھلے دروازے سے فرنٹ ہوجاتا۔ گلی اس کی جنت تھی۔

بَنٹے، گڈیاں، گلی ڈنڈا، بارہ ٹہنی
یہ بڑا ہو کر کیا بنے گا۔ ماسٹر رحمت علی تاسف سے سوچتے۔ جو شخص عاداعظم صحیح نہ نکال سکے وہ کیا خاک قائداعظم کے نقش قدم پر چلے گا۔ پڑھائی میں اچھا ہوتا تو کیا کچھ نہیں بن سکتا تھا۔ افسر، ڈاکٹر، انجینئر، ماسٹر جی فُٹے سے اس کی ہتھیلیاں لال کردیتے۔ وہ اسکول میں اس کی ریاضی کی کلاس لیتے تھے اور اپنی اولاد ہونے کی وجہ سے انھیں اس پر دُہرا غصہ آتا تھا

لیکن اپنی ماں اور محلے والیوں کا وہ آنکھ کا تارا تھا۔ گورا رنگ تھا، کوئی اسے بگاکہتا۔ بال بھورے، کوئی ککا کہتا۔ سر پر گھنگھریالے بالوں کا چھتا۔ کوئی کنڈلاں والا اور کوئی شربتی آنکھوں کے حوالے سے بِلا کہہ دیتا۔ لیکن اس کا اپنا نام بھی تھا۔ ماسٹر جی اسے ہمیشہ محمد اکبر بلاتے تھے۔

جب بالغ ہوا، تو اس کے حسن نے گلی میں دھوم مچادی۔ کسی کھڑکی سے گنگنانے کی آواز آتی…بگیا …ککیا…اوئے کنڈلاں والیا…لیکن وہ سیدھا تھا، سیدھا گزر جاتا۔ محلے والیاں اسے اپنا سمجھتی تھیں۔ کیونکہ وہ کھلنڈرا ہونے کے باوجود محلے کے باقی لڑکوں کی نسبت فرمانبردار تھا۔
محلے سے گزر رہا ہوتا، تو کوئی ٹماٹر لانے کا کہہ دیتی، کوئی دہی کا برتن تھمادیتی، کسی کو سوڈے کی بوتل منگوانا ہوتی۔ اکثر نے دل ہی دل میں اسے اپنی بیٹیوں کے لیے پسند کرلیا تھا۔
لیکن اسے دیکھ کر دل مسوس کررہ جاتیں۔ موازنے پر وہ ان کی بیٹیوں سے زیادہ خوبصورت نکلتا۔ لیکن پھر بھی وہ اس کی ماں کی خاطر داریوں میں کسر نہ چھوڑتیں۔ کہیں سے ساگ پک کر آجاتا کہیں سے کڑھی۔ ماں کو بیٹے پر ناز تھا اور اسے سمجھ نہیں آتی تھی کہ آخر اس کا باپ اس کی قدر کیوں نہیں کرتا؟
’’سوہنی شکل کو آگ لگانی ہے‘‘ ماسٹر جی کہتے۔’’دو سوال تو ٹھیک نکلتے نہیں اس سے۔‘‘

آخر بگے نے گھسٹ گھسٹا کر میٹرک کرلیا۔ لیکن کسی کالج میں داخلہ نہ ملا۔ وہ اور اس کے جیسے دوسرے، کالجوں کے میرٹ سے میلوں دور تھے۔

ماسٹر جی سر پیٹ کر رہ گئے۔ دوبارہ امتحان دلوایا گیا۔ پہلے سے بھی کم نمبر ...


This page:




Help/FAQ | Terms | Imprint
Home People Pictures Videos Sites Blogs Chat
Top
.