peperonity.net
Welcome, guest. You are not logged in.
Log in or join for free!
 
Stay logged in
Forgot login details?

Login
Stay logged in

For free!
Get started!

Guestbook


khota sona - Newest pictures
a--------urdu.duniya.in.peperonity.net

❦ کھوٹا سونا ❦

معاشرتی مسائل

جب سے جماعت کی لڑکیاں اسے چھیڑنے لگیں تب سے اس کا بیشتروقت آئینے کے سامنے کھڑے گزرنے لگا ۔ سب لڑکیوں کی ایک ہی رائے تھی کہ سونا بڑی پیاری ہے۔ وہ نہ صرف نام کی سونا تھی بلکہ شکل و صورت سے بھی کچھ کم نہ تھی۔ کلاس میں جب لڑکیاں اسے چھیڑتیں کہ تم پہ تو لڑکے جان دیتے ہیں تو وہ دل ہی دل میں آسمان کو چھونے دوڑتی۔ ایک تو تھی وہ بلا کی خوب صورت، اوپر سے لڑکیوں کی تعریف نے اس کا قد غرو ر کی ملاوٹ سے بڑھانا شروع کر دیا ۔ روز گھر آ کے آئینے کے سامنے کھڑی ہو کر اپنے سراپے پہ نظر دوڑاتی اور نیم مسکراہٹ کے ساتھ اپنے ہی آپ بُدبُداتی کمرے میں چلی جاتی۔

کچھ دنوں سے سونا کی اماں متفکر سی رہنے لگی تھی۔ جب بیٹیوں کے قد حد سے نکلتے اور قدم دہلیز کی طرف لپکنا شروع ہوتے ہیں تو کسی اورکو خبر ہو نا ہو، ماں کے دل میں فِٹ گھڑیال گھنٹا بجانا شروع کر دیتا ہے۔ سونا کی ماں غور کر رہی تھی کہ سونا بیٹھے بیٹھے ہنسنا شروع کر دیتی ہے کبھی اداس ہو جاتی اور کبھی بت بن کر خلائوں میں گھورتی رہتی ہے۔ اپنے ہی آپ پریشان ہو جاتی اور خود بخود خوش ہو جاتی ہے۔ کبھی اسکول سے آتے ہی کتابیں میز پر پھینکیں اور دھڑام سے بستر پر گر جاتی اور گھنٹوں کمرے سے باہر نہیں آتی تھی اورکبھی آتے ہی ہمسایوں کی بچیوں کے ساتھ کھیل کود میں ایسے مشغول ہوتی کہ شام کی اذانیں ہو جانے پر بھی ان کا کھیل ختم نہ ہوتا۔

ماں روز روز اس کی حرکتوں اور بے جا سوچ بچار کے بھنور میں مبتلا اس کی صورت کو دیکھتی ایک انجانے خوف میں مبتلا ہونے لگی۔ جانے اس کی ماں کو کس چیز کا ڈر کھائے جا رہا تھاکہ وہ اندر ہی اندر گھلتی چلی جا رہی تھی، کبھی کھل کے اس نے اپنی بیٹی سے کوئی بات کی ہی نہیں تھی۔ شروع سے اس کا وتیرہ تھا کہ بیٹا ہو یا بیٹی اس سے مطلب کی بات کی جائے یا پھر غصے سے ڈانٹ دیا جائے۔ کبھی اپنی بیٹی کو ٹٹولنے یا اس کو اپنے دل کے قریب کرنے کا اس نے سوچا ہی نہ تھا۔ بیٹی کے دل و دماغ میں کون سا طوفان پل رہاہے، اس نے جاننے کی کوشش ہی نہ کی۔

ایک دن سونا اسکول سے آئی، سیدھی اپنے کمرے میں چلی گئی اور اندر سے دروازہ بند کر لیا۔ یہ دیکھ کر ماں پریشان ہو گئی۔بھاگ کر کمرے کی طرف گئی اور دروازہ بجانا شروع کیا مگر سونا نے دروازہ کھولنے کا نام ہی نہیں لیا۔ بڑی منت سماجت اور ...


This page:




Help/FAQ | Terms | Imprint
Home People Pictures Videos Sites Blogs Chat
Top
.