peperonity.net
Welcome, guest. You are not logged in.
Log in or join for free!
 
Stay logged in
Forgot login details?

Login
Stay logged in

For free!
Get started!

Guestbook


ramzi miyan ne sauda khareeda - Newest pictures
a--------urdu.duniya.in.peperonity.net

❖ رمضی میاں نے سودا خریدا ❖

طنز و مزاح


وہ خود تو کبھی سودا خریدنے نہیں گئے مگر ملازم کی لائی ہر چیز میں کیڑے نکالنا گویا ان کا فرضِ اولین بن چکا تھا۔ خاص طور پر چھٹی والے دن مچان لگا کر برآمدے میں بیٹھ جاتے۔ ادھر کلّو غریب سودا لے کر ہانپتا سائیکل سے اترا، اُدھر رمضی میاں کے سوالات کا آغاز ہوتا:
’’یہ گوشت کہاں سے اٹھا لیا کم بخت۔‘‘ پہلے گوشت کی باری آتی۔
’’میاں ایک ہی تو قصائی ہے جو اپنے گھر گوشت دیتا ہے۔‘‘
’’مجھے تو لگتا ہے کتے کا گوشت ہے۔‘‘
’’خدا کا نام لیں میاں، کتے وہاں کہاں سے آ گئے۔ روزانہ تازہ بکرے کرتا ہے اپنا قصائی۔‘‘
’’آج ہی اخبار میں خبر آئی ہے کہ مارکیٹ میں سرعام کتے کا گوشت فروخت ہو رہا ہے۔‘‘ رمضی میاں نے فتویٰ صادر کر دیا۔ ’’یہ گوشت بلیوں کتوں کو کھلا دو۔‘‘
ان کا یہ ارشاد سن کر اندر سے بیگم چلاتی ہوئی نکل آئیں۔ ’’کیا خبط ہو گیا ہے تمھیں، گوشت بلیوں کو کیوں ڈلوا رہے ہو! دماغ تو ٹھکانے پر ہے تمھارا!‘‘
’’ذرا اس گوشت کا حلیہ تو دیکھو۔ بھلا بکرے کا گوشت ایسا ہوتا ہے! ضرور یہ کہیں اور سے گندا گوشت اٹھا لایا ہے۔ بھلا بنارس قصائی ایسا گوشت بناتا ہے!‘‘
’’میاں خدا کی قسم، بنارس سے ہی بنوا کر لایا ہوں۔‘‘ کلّو نے فریاد کی۔
’’چپ کر بے… ایک چپت لگائوں گا…‘‘ رمضی میاں غرّائے۔ اس دوران بیگم گوشت کا لفافہ اٹھا باورچی خانے جا چکی تھیں۔
اب رمضی میاں نے سبزی کی طرف رخ کر لیا: ’’یہ گو بھی کیا کوڑے سے لایا ہے! اور یہ ٹماٹر سِرکہ ہو رہے ہیں…‘‘
کلّو روہانسا ہو کر بولا: ’’اسی شبراتی منحوس کی دکان سے لایا ہوں میاں… اب اور کدھر جائوں!‘‘
’’سودا جہاں سے بھی لے… ذرا آنکھیں کھلی رکھا کر مردار!… تُو تو لگتا ہے وہاں پیسے پھینکنے جاتا ہے۔‘‘ رمضی میاں نے کچوکے دیے۔
’’میاں آپ خود جا کر لے آیا کریں سودا! میں بھلا اب کیا کروں، اس سے اچھا سودا پوری مارکیٹ میں نہیں ہے۔‘‘
رمضی میاں کی غیرت کو تازیانہ لگا، بولے ’’اچھا تو تیرا خیال ہے میں سودا نہیں خرید سکتا…‘‘ ’’ارے برخوردار… میں تو ایسا سودا خریدتا ہوں کہ دکاندار کا کلیجہ نکال لاتا ہوں۔‘‘
کلو مجرم بنا کھڑا تھا۔ بولا ’’ میاں میرا یہ مطلب ہرگز نہیں تھا۔ میں تو یہ کہہ رہا تھا…‘‘
’’میں خوب سمجھتا ہوں تجھے… آج کے ...


This page:




Help/FAQ | Terms | Imprint
Home People Pictures Videos Sites Blogs Chat
Top
.